پیراسائٹ بہترین فلم، فینکس بہترین اداکار اور رینی بہترین اداکارہ قرار


سال 2020 کے لیے آسکرایوارڈ کا میلہ سج گیا۔ توقع کے برخلاف فلم ‘پیراسائٹ’ بہترین فلم کا ایوارڈ لے اڑی، رینی زیل وگر بہترین اداکارہ اور واکین فنیکس بہترین اداکار قرار پائے جب کہ براڈ پٹ پہلا ایکٹنگ اکیڈمی ایوارڈ برائے بہترین معاون اداکار حاصل کرنے میں کامیاب رہے۔

تقریب اتوار اور پیر کی درمیانی شب لاس اینجلس کے ڈولبی تھیٹر میں منعقد ہوئی۔ آغاز موسیقی کی مدہوش کردینے والی دھنوں سے ہوا تاہم تقریب میں ایوارڈ حاصل کرنے والی خواتین اور اقلتیوں کی کمی کو سب نے نوٹ کیا۔

فلم کی کامیابی کو دیکھتے ہوئے فلمی حلقوں میں توقع کی جارہی تھی کہ فلم ‘1917’ یا ‘جوکر’ بہترین فلم قرار پائیں لیکن یہ قرعہ غیر متوقع طور پر فلم ‘پیراسائٹ’ کے نام کھلا۔

فلم ‘پیراسائٹ ‘کو بہترین فلم کے ساتھ ساتھ بہترین اوریجنل اسکرین پلے کا ایوارڈ بھی دیا گیا۔

‘پیراسائٹ’ کو جنوبی کوریا کے ہونگ جنگ ہو, نے ڈائریکٹ کیا ہے۔ تاریخ میں یہ پہلا موقع ہے جب کسی ایشین کو اس ایوارڈ سے نوازا گیا ہے۔

بہترین سنیماٹوگرافی اور ساؤنڈ مکسنگ کے فلم 1917 چنا گیا جب کہ اسے کئی دوسری کیٹیگریز کے لئے نامزدگیاں حاصل ہوئی تھیں۔

بہترین دستاویزی فلم کے لیے سابق امریکی صدراوباما اور خاتون اول مشعل اوباما پر بننے والی فلم دی امریکن فیکٹری کو ایوارڈ سے نوازا گیا۔

اسے نیٹ فلکس کے لیے جولیا ریشرٹ نے ڈائریکٹ کیا ہے۔ فلم کی کہانی امریکہ چین تعلقات کے پس منظرمیں ایک پلانٹ پر کام کرنے والے فیکٹری ملازمین کے گرد گھومتی ہے۔

بہترین دستاویزی فلم کی کیٹیگری کے لیے جن دوسری فلموں کو نامزد کیا گیا تھا ان میں دی ایچ آف ڈیموکریسی، دی کیو، فار سما اور ہنی لینڈ شامل تھیں۔


خبر کا حوالہ

اس بارے میں admin

یہ بھی دیکھیں

کیا پاکستان ٹیم میں محمد عامر کی جگہ بنتی تھی؟

کراچی —  بھارتی بلے باز ویراٹ کوہلی کے مطابق انہوں نے اپنے کریئر میں محمد …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *